کراچی اسٹاک گزشتہ ہفتے 213 پوائنٹس کی ریکوری سرمایہ کاروں کو 55 ارب کا منافع

کراچی (بزنس رپورٹر) کراچی اسٹاک مارکیٹ گزشتہ کاروباری ہفتہ اتار چڑھاو¿ کی زد میں رہی لیکن اس کے باوجود35054 پوائنٹس کی ریکارڈ سطح کو چھو لیا اور کاروباری ہفتے کے دوران ایک بار پھر 34600 پوائنٹس پر بند ہو کربلند ترین سطح کا ریکارڈ بنانے کی روایت کو برقرار رکھا۔55ارب سے زائد روپے کے اضافے سے مارکیٹ کا مجموعی سرمایہ 78 کھرب روپے سے تجاوز کر گیا۔ کراچی اسٹاک میں گزشتہ کاروباری ہفتے کے آغاز پر تیزی کا رجحان غالب رہا اور پہلے روز کے ایس ای 100انڈیکس 34676پوائنٹس جبکہ دوسرے دن کاروباری تیزی کے ساتھ انڈیکس 34827پوائنٹس کی سطح پر جا پہنچا، بعد ازاں آنیوالے 2کاروباری دنوں میں مندی کے اثرات دیکھے گئے جس کی وجہ سے انڈیکس میں 169.57پوائنٹس کی کمی ریکارڈ کی گئی ،تاہم مجموعی طور پر 5 کاروباری دنوں میں سے ایک دن سرکاری تعطیل کے باوجود 2روزہ کاروباری تیزی کے ساتھ 100انڈیکس 34443.87 پوائنٹس سے بڑھ کر 34656.94پوائنٹس پر جا پہنچا، اس طرح کے ایس ای 100انڈیکس میں گزشتہ کاروباری ہفتے کے دوران 213.07 پوائنٹس کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جبکہ 198 پوائنٹس کے اضافے سے کے ایس ای 30انڈیکس 22489.58پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس157پوائنٹس اضافے سے 24730.26پوائنٹس سے بڑھ کر 24887.01پوائنٹس پر بندہوا۔ تجزیہ کاروں کے مطابق کیونکہ انڈیکس 35000پوائنٹس کے قریب ہے اس لیے مارکیٹ تکنیکی درستگی کا شکار ہے جبکہ گزشتہ ہفتے اسٹاک مارکیٹ سے غیر ملکی سرمایہ کاروں کی جانب سے 4 کروڑ سے زائد ڈالر کاسرمایہ نکالے جانے کے باعث مارکیٹ منفی زون میں چلی گئی۔ تجزیہ کاروں کے مطابق پٹرولیم مصنوعات کی قیمت میں نمایاں کمی اورافراط زر میں کمی کے بعد بینکوں نے شرح سود میں کمی کر دی جس کے بعد سرمایہ کاروں کے لیے یہ دونوں سیکٹر منافع بخش نہیں رہے جس کے باعث سرمایہ کاروں نے سیمنٹ، توانائی سمیت دیگر منافع بخش شعبوں کا رخ کرلیا اس صورتحال کا مقامی انسٹی ٹیوشنز اور بروکریج ہاو¿سز نے بھرپورفائدہ اٹھا کر منافع خوری کی خاطر بعض اسٹاکٹس میں حصص بھی فروخت کی جس کے سبب مارکیٹ اتار چڑھاو¿ کی زد میں رہی۔ کراچی اسٹاک مارکیٹ کی ہفتہ وار رپورٹ کے مطابق کاروباری اتار چڑھاو¿ کے باوجود مارکیٹ کے سرمائے میں 55ارب 6کروڑ 65لاکھ 51ہزار 353روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس کے نتیجے میں مارکیٹ کا مجموعی سرمایہ 77 کھرب 98ارب 41کروڑ 47لاکھ 42 ہزار 436روپے سے بڑھ کر 78کھرب 53ارب 48 کروڑ 12 لاکھ 93 ہزار 789روپے ہوگیا۔ کراچی اسٹاک میں مجموعی طور پر 1531کمپنیوں کا کاروبار ہوا جس میں سے 651 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ، 791میں کمی اور 89کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔ کاروبار کے لحاظ سے جہانگیر صدیقی کمپنی، پاک انٹرنیشنل بلک، کے الیکٹرک لمیٹڈ، پاک الیکٹرون، پاور سیمنٹ لمیٹڈ، فوجی سیمنٹ اور میپل لیف سیمنٹ سرفہرست رہے۔

Print Friendly, PDF & Email